رازداری پالیسی

ہمارے بارے میں

رابطہ

  • قومی نیوز
  • ہوم

    Hindi

    Epaper Urdu

    YouTube

    Facebook

    Twitter

    Mobile App

    دہلی فساد معاملہ ، ہائی کورٹ کے آرڈرکا حوالہ دیکر پولیس نے ایف آئی آر دینے سے کیا انکار

    اسمبلی کی اقلیتی فلاحی کمیٹی نے مانگی تھیں ایف آئی آر،رکے اور رد ہوئے معاوضوں پر ہورہاہے کام،ایک مہینہ کے اندر متاثرین تک معاوضہ کی فراہمی کو یقینی بنائیں گے : امانت اللہ خان

    نئی دہلی : دہلی کے شمال مشرقی علاقے میں ہونے والے فسادات میں متاثرین تک انصاف کی رسائی کو یقینی بنانے اور جو لوگ معاوضہ سے محروم رہ گئے ہیں ان تک معاوضہ پہونچانے کے لیئے دہلی اسمبلی کی اقلیتی فلاحی کمیٹی تیزی اور سنجیدگی کے ساتھ کام کر رہی ہے۔اس سلسلہ میں کمیٹی کی اب تک کئی میٹنگیں ہوچکی ہیں جن میں متاثرین تک معاوضہ کی عدم فراہمی اور گنہگاروں کے خلاف ایف آئی آرنہ ہونے جیسی کئی بڑی خامیاں سامنے آئی ہیں جن پر کمیٹی یکے بعد دیگرے کام کر رہی ہے اور متعلقہ افسران کو طلب کرکے خامیوں کی نہ صرف نشاندہی کی جارہی ہے بلکہ افسران سے ان خامیوں کو جلد از جلد دور کرکے متاثرین تک انصاف کی رسائی کو یقینی بنانے کے لیئے بھی کہا جارہاہے۔

    کمیٹی کے چیئرمین امانت اللہ خان کی صدارت میں آج ہونے والی میٹنگ میں چاندنی چوک سے رکن اسمبلی پرہلاد سنگھ ساہنی،سیلم پور سے عبد الرحمن،مصطفی آباد سے حاجی یونس نے شرکت کی جبکہ پرنسپل سیکریٹری ہوم،ہیلتھ سیکریٹری اور شمال مشرقی علاقہ کے متعلقہ ایس ڈی ایم اور ڈی ایم کے علاوہ دہلی وقف بورڈ کے افسران میں سے سیکشن آفیسر حافظ محفوظ محمد،ویلفیئرسیکشن انچارج فیروز،آئی ٹی انچارج محمد عمران،اور لیگل اسسٹنٹ احسن جمال بھی میٹنگ میں موجود رہے۔میٹنگ کی شروعات میں ہی سب سے پہلے ایسے میڈیکل کیسوں پر بحث ہوئی جن میں چوٹ کافی بڑی ہے مگر میڈیکل رپورٹ میں ڈاکٹروں نے معمولی زمرہ میں کیس ڈال دیا جسکی وجہ سے نہ ہی حکومت کی جانب سے طے شدہ معاوضہ ملا اور نہ ہی متعلقہ میڈیکل سرٹیفکیٹ ۔ میٹنگ میں ہیلتھ سیکریٹری صاحبہ کے سامنے کمیٹی کے چیئرمین امانت اللہ خان نے توفیق،ماسٹر سلمان،ذاکر انصاری،فیروز اختر اور اکرم کے کیس رکھتے ہوئے بتایا کہ ان سب کو بڑی انجری آئی ہے

    یہ بھی پڑھیں  اناج منڈی میں شدید آتشزدگی ، 43 افراد کی موت

    اور کچھ ان میں سے معذور ہوگئے ہیں تاہم پھر بھی ڈاکٹروں کی لاپرواہی سے ان کی میڈیکل رپورٹ میں معمولی چوٹ کا ذکر کیا گیاہے۔مصطفی آباد کے اکرم نامی شخص کو میٹنگ میں کمیٹی کے سامنے پیش بھی کیا گیا جسکے ایک ہاتھ کو ڈاکٹروں نے کاٹ دیااور دوسرے ہاتھ کی انگلی کاٹ دی مگر میڈیکل رپورٹ میں اسے معمولی زخمی کی فہرست میں رکھا گیا ہے اور صرف 20ہزار روپیہ معاوضہ دیا گیاہے۔ہیلتھ سیکریٹری نے ایسے تمام کیسوں کی دوبارہ تحقیقات کی یقین دہانی کرائی۔ اس کے علاوہ گزشتہ میٹنگ میں پرنسپل سیکریٹری ہوم کو فساد سے جڑی تمام 754ایف آئی آر فراہم کرنے کے لیئے کہاتھا تاہم پولیس ان تمام ایف آئی آر کو حساس بتاکر کمیٹی کو فراہم کرنے سے بچ رہی ہے۔آج میٹنگ میں پرنسپل سیکریٹری ہوم نے پولیس کی جانب سے پیش کئے گئے

    یہ بھی پڑھیں  چانکیہ اورمر آہن سردار پٹیل کے ایک ہندوستان کے خواب کو ہم نے پورا کیا

    جواز کو کمیٹی کے سامنے رکھا جس میں 2011کے ہائی کورٹ کے آرڈر کا حوالہ دیکر ایسی ایف آئی آر کو فراہم نہ کرنے کا جواز تلاش کیا گیاہے۔اس کے علاوہ گزشتہ میٹنگ میں جو پانچ ایف آئی آر ایک جیسی پائی گئیں تھیں ان کے بارے میں پولیس نے کوئی واضح جواب نہ دیتے ہوئے یہی کہاکہ پٹرولنگ کے دوران پولیس کو وہ مطلوبہ شخص ملے جن کے خلاف ایف آئی آر کی گئی ہے اور اگر کسی کے خلاف غلط ایف آئی آر ہوئی ہے تو وہ عدالت میں اسے چیلنج کرسکتا ہے۔گزشتہ میٹنگ میں افسران کے سامنے کچھ ایسے ویڈیو چلائے گئے تھے جن میں کچھ لوگ فساد کرتے ہوئے صاف دیکھے جاسکتے ہیں۔

    یہ بھی پڑھیں  یوپی میں امن وامان بہت خراب ہورہا ہے ، ہاترس میں تین اگست سے تین عصمت دری کے واقعات ہوچکے ہیں : سوربھ بھاردواج
    اکرم کو ملے گا پانچ لاکھ کا معاوضہ
    فساد میں اکرم نامی شخص کافی زخمی ہوگیا تھا جس کے بعد ڈاکٹروں نے اس کا ایک ہاتھ کاٹ دیا جبکہ دوسرے ہاتھ کی انگلی بھی کاٹ دی گئی،فساد میں اتنا سب کچھ کھونے کے بعد بھی ڈاکٹروں کی لاپرواہی کا یہ عالم رہاکہ اکرم کو معمولی زکمی کی فہرست میں ڈال دیا گیا جسکی وجہ سے اسے صرف 20ہزار روپیہ ہی بطور معاوضہ مل سکا اور اپنی معذوری کا سرتفکیٹ بھی اسے نہیں ملا۔آج اقلیتی کمیٹی کی میٹنگ کے دوران چیئرمین امانت اللہ خاں نے ہیلتھ سیکریٹری کے سامنے اکرم کو پیش کیاجس کے بعد افسران نے مانا کہ یہ تو شدید انجری کی فہرست میں آنا چاہیئے۔ہیلتھ سیکریٹری نے اس کے کیس پر دوبارہ غور کرنے کی یقین دہانی کرائی جس کے بعد اکرم کے کیس کو معذوری کے زمرہ میں رکھ کر حکومت کی گائڈ لائن کے مطابق اسے 5لاکھ کا معاوضہ دیا جائے گا۔

    کمیٹی نے پولیس سے جانکاری مانگی تھی کہ ان لوگوں کے خلاف کیا کارروائی کی گئی۔پولیس کی جانب سے ہوم سیکریٹری کے توسط سے کمیٹی کو جواب موصول ہوا ہے کہ کل سات ویڈیو میں سے 3میں ایف آئی آر درج کرلی گئی ہے جبکہ باقی ویڈیو کا ابھی تجزیہ کیا جارہاہے۔آج کمیٹی کے سامنے دو ویڈیواور چلائے گئے جن میں ایک میں ایک گودام کو لوٹا جارہاتھا جبکہ دوسرے ویڈیو میں راگنی تیواری نامی عورت پولیس والوں کے سامنے بھیڑ کو بھڑکانے کاکام کر رہی تھی۔متعلقہ ویڈیو میں یہ عورت اشتعال انگیز زبان استعمال کرنے اور پولیس والوں کو گالیاں دیتے ہوئے صاف طور پر سنی جاسکتی ہے

    یہ بھی پڑھیں  مہاراشٹر حکومت کاپہلابجٹ : اقلیتوںکی فلاح کیلئے 550 ؍ کروڑ کا بجٹ مختص
    یہ بھی پڑھیں  مہاراشٹر حکومت کاپہلابجٹ : اقلیتوںکی فلاح کیلئے 550 ؍ کروڑ کا بجٹ مختص

    اس سے متعلق پرنسپل سیکریٹری ہوم نے اگلی میٹنگ میں رپورٹ پیش کرنے کی یقین دہانی کرائی۔میٹنگ کے دوران دہلی وقف بورڈ کی جانب سے رد ہوئے کیسوں کی ویری فکیشن کے بعد دوبارہ پیش کی گئی لسٹ پر بھی بحث ہوئی جن میں سے 54پر کام ہورہاہے جنھیں جلد ہی معاوضہ مل جائے گا۔میٹنگ کے دوران کمیٹی کے چیئرمین امانت اللہ خان نے افسران سے اس پورے معاملہ میں سنجیدگی اور تیزی کے ساتھ کام کرنے کی ہدایت کی۔انہوں نے کہاکہ متاثرین دوہری مار کا شکارہیں۔ایک تو انھیں فساد میں لوٹا اور برباد کردیا گیا اور اب وہ معاوضہ کے لیئے دربدر بھٹک رہے ہیں اس لیئے آپ لوگ انسانیت کے ناطے سنجیدہ ہوکر کام کریں اور متاثرین تک انصاف کی رسائی کو یقینی بنائیں۔

    LEAVE A REPLY

    Please enter your comment!
    Please enter your name here

    Latest news

    مرکزی وزیر آیوش نے سی سی آر یو ایم کا دورہ کیا اور تحقیقی کاموں کی پذیرائی کی

    نئی دہلی : وزارت آیوش اور وزارت بندرگاہ، جہاز رانی اور آبی راستوں کے کابینی وزیر جناب سروانند سونوال...

    کرناٹک میں سیلاب سے بے گھر ہوئے لوگوں کو بھی جمعیۃعلماء ہند نے فراہم کیا آشیانہ

    ہندوستان میں اسلام حملہ آوروں سے نہیں مسلم تاجروں کے ذریعہ پہنچا ، ملک میں اقتدارکے لئے ہورہی ہے...

    عام آدمی پارٹی کی حکومت بننے کے 24 گھنٹوں میں یوپی کے عوام کو 300 یونٹ بجلی مفت ملے گی: منیش سسودیا

    لکھنؤ / نئی دہلی : عام آدمی پارٹی نے اتر پردیش میں آئندہ اسمبلی انتخابات کے حوالے سے ایک...

    بی جے پی کے دورحکومت میں ملک کی خواتین و بیٹیاں انصاف کے لئے در در بھٹک رہی ہیں

    کانگریس ہیڈ کوارٹر 24 اکبر روڈ پر کانگریس خواتین کے زیر اہتمام منعقدہ یوم خواتین کے موقع پرعمران پرتاپ...

    تبلیغی جماعت کے مرکز ’ نظام الدین‘ کو ہمیشہ کے لئے تو بند نہیں کیا جا سکتا : عدالت

    نئی دہلی : مرکزی حکومت نے دہلی ہائی کورٹ میں کہا ہے کہ گزشتہ سال جو تبلیغی جماعت کے...

    بی جے پی اور یوگی حکومت نہ تو آم کی ہے اور نہ ہی رام کی، انہوں نے رام مندر کے چندے میں بھی...

    ایودھیا/نئی دہلی : عام آدمی پارٹی نے منگل کو پارٹی کے سینئر لیڈر اور دہلی کے نائب وزیر اعلی...

    Must read

    You might also likeRELATED
    Recommended to you