رازداری پالیسی

ہمارے بارے میں

رابطہ

  • قومی نیوز
  • ہوم

    Hindi

    Epaper Urdu

    YouTube

    Facebook

    Twitter

    Mobile App

    سیلم پور میں ڈرون سے نگرانی ، یوپی کے 21 اضلاع میں ہائی الرٹ

    نئی دہلی: شہریت ترمیمی قانون کے خلاف احتجاج کا سلسلہ جاری ہے۔ جمعہ کو دہلی کی جامع مسجد پر لوگ احتجاج کررہے ہیں۔ وہیں دوسری طرف سیلم میں ڈرون کے ذریعہ صورتحال پر نظر رکھی جاری ہے۔ ادھر اترپردیش میں پْر تشدد احتجاجی مظاہروں کے پیش نظر احتیاط کے طورپر جمعرات کی دیررات سے ہی دارالحکومت لکھنؤسمیت ریاست کے 21 ضلعوں میں انٹرنیٹ سروس بند کردی گئی ہے۔ پرتشدد مظاہرے کے بعد جمعہ کی نماز کے پیش نظر ہنگامہ ہونے کے امکان پر ریاست میں اضافی نگرانی کرنے کی سخت ہدایت دی گئی ہے۔یوپی میں جمعہ کی نماز کے بعد تمام حساس مقامات پر سخت سکیورٹی کا انتظام کیا گیا ہے۔ پولیس کے مطابق اس وقت حالات معمول پر ہیں۔

    دفعہ 144 نافذ ہے ، لیکن احتیاط برتی جارہی ہے تاکہ پْرتشدد مظاہرے دوبارہ نہ ہوں۔ شہریت ترمیمی ایکٹ پر تشدد کے بعد ، ریاست میں صورتحال آہستہ آہستہ معمول پر آرہی ہے۔ہنگامے کے پیش نظر یوپی انتظامیہ پہلے ہی حساس اضلاع میں احتیاط کے طور پر بند کا اعلان کر چکی ہے۔ ضلعی انتظامیہ نے دارالحکومت لکھنؤ ، میرٹھ ، سہارنپور ، آگرہ ، بلندشہر ، غازی آباد ، بجنور ، بریلی اور فیروز آباد سمیت 21 اضلاع میں کل رات سے انٹرنیٹ سروس بند کردی ہے۔ ریاستی حکومت نے تمام اضلاع کے ڈسٹرکٹ مجسٹریٹوں کو چھوٹ دی ہے کہ اگر حساس اور فرقہ وارانہ کشیدگی کا خدشہ ہے تو وہ احتیاط کے طور پر اپنے علاقے میں انٹرنیٹ بند کرسکتے ہیں۔انتظامیہ نے لوگوں سے جمعہ کی نمازکے بعد گھرواپس لوٹنے کی اپیل کی ہے۔محکمہ پولیس کی جانب سے حساس مقامات پرچوکسی برتی جارہی ہے۔

    یہ بھی پڑھیں  راجستھان :کورونا کی روک تھام کے لئے ماسک نہ پہننے پر 2 لاکھ 54 ہزار افراد کا چالان
    یہ بھی پڑھیں  ترک صدرنے کی داود اوگلو کی استنبول یونیورسٹی بند

    اترپردیش پولیس نے لوگوں سے افواہوں پردھیان نہ دینے کی اپیل کی ہے۔ اترپردیش میں کئی اضلاع میں افسرپیدل مارچ کرتے ہوئے حالات کا جائزہ لیے رہے ہیں۔یاد رہے کہ پچھلے جمعہ کو پر تشدداحتجاج ہواتھا۔جس کے دوران 15سیزائدافرادہلاک ہوگئے تھے۔ جس کے بعد پولیس نے سیکڑوں ملزمین گرفتارکیاتھا۔ اترپردیش پولیس نے 5ہزارسے زائدافراد حراست میں لئے گئے ہیں۔ادھر جمعہ کی نماز کو لے کر دہلی کے سیلم پور میں ڈرون کے ذریعہ نظر رکھی جارہی ہے۔

    https://www.youtube.com/channel/UC_LN2bCmBURQzym-hEiqNagc

    LEAVE A REPLY

    Please enter your comment!
    Please enter your name here

    Latest news

    کورونااورلاک ڈاؤن بھی نفرت کے وائرس کو ختم نہیں کرسکے

    مذہبی منافرت اور فرقہ وارانہ بنیاد پر عوام کو تقسیم کرنے کا یہ خطرناک کھیل آخر کب تک؟: مولانا...

    مسلمانوں سے متعلق میڈیا کا دہرا رویہ تشویشناک ، گرفتاریوں کا ڈھنڈورا لیکن عدالت سے رہائی کا کوئی ذکر نہیں : مولاناارشدمدنی

    نئی دہلی : بنگلور سیشن عدالت کی جانب سے دہشت گردی کے الزامات سے ڈسچار ج کیئے گئے تریپورہ...

    ہماری سرکار اردو کے فروغ کے لیے سنجیدہ ہے : وزیراعلیٰ،دہلی

    وائس چیئرمین اکادمی حاجی تاج محمد سے خصوصی ملاقات میں متعلقہ مسائل کے حل کی یقین دہانی نئی دہلی :...

    جن کے پاس راشن کارڈ نہیں ہے اور وہ راشن لینا چاہتے ہیں، وہ مرکز میں آکر راشن لے سکتے ہیں: گوپال رائے

    نئی دہلی : دہلی کے وزیر ترقیات گوپال رائے نے آج بابرپور کے علاقے کردمپوری میں پرائمری اسکول میں...

    رام مندر کے لئے ، 12080 مربع میٹر اراضی 18.50 کروڑ میں خریدی گئی ، جبکہ اس سے متصل 10370 مربع میٹر اراضی صرف...

    نئی دہلی : عام آدمی پارٹی کے سینئر رہنما اور اترپردیش انچارج سنجے سنگھ نے رام مندر کے لئے...

    نائب وزیر اعلی اور وزیر خزانہ منیش سسودیا نے غیر ضروری سرکاری اخراجات کو کم کرنے کا حکم جاری کیا

    نئی دہلی : کورونا کی وجہ سے اخراجات میں اضافے کی وجہ سے ، دہلی حکومت نے اخراجات کے...

    Must read

    You might also likeRELATED
    Recommended to you