رازداری پالیسی

ہمارے بارے میں

رابطہ

  • قومی نیوز
  • ہوم

    Hindi

    Epaper Urdu

    YouTube

    Facebook

    Twitter

    Mobile App

    ہائی کورٹ پہنچا ہنی ٹریپ کیس ، تحقیقات میں رکاوٹ کا خدشہ

    اندور: مدھیہ پردیش کاہائی پروفائلمعاملہ اب ہائی کورٹ پہنچ گیا ہے۔ اس معاملہ میں مدھیہ پردیش ہائی کورٹ کی اندور بنچ میں گزشتہ دنوں ایک مفاد عامہ کی عرضی دائر کی گئی ہے، جس میں معاملہ کی تحقیقات میں رکاوٹ ہونے کا خدشہ ظاہر کیا گیا ہے۔ ساتھ ہی مطالبہ کیا گیا ہے کہ معاملے کی جانچ ہائی کورٹ کی نگرانی میں کرائی جائے۔ یہ عرضی اندور رہائشی شیکھر چودھری نامی شخص کی طرف سے دائر کی ہے۔ درخواست گزار نے ایڈووکیٹ دھرمیندر چیلاوت کے ذریعے دائر درخواست میں کہا ہے کہ ریاستی حکومت نے معاملے کی تحقیقات کے لئے ایس آئی ٹی کی تشکیل تو کر دی ہے، لیکن بار بار ایس آئی ٹی میں حکام کو تبدیل کیا جا رہا ہے۔

    کچھ دن پہلے آئی پی ایس سنجیو شمی کو ایس آئی ٹی کا سربراہ بنایا تھا، لیکن بعد میں تبدیل کر دیا گیا۔ جو بھی افسر ان تحقیقات کر رہے ہیں، وہ ریاستی حکومت کے تحت ہیں، ایسی صورت میں تحقیقات کے متاثر نہ ہونے کا امکان کم ہے۔ جانچ سی بی آئی یا کسی مرکزی ایجنسی کو سونپی جائے اور ہائی کورٹ روز بروز اس کی نگرانی کرے، جس سے غیر جانبدارانہ جانچ ہو سکے۔ درخواست میں الزام ہے کہ حکومت اس معاملے کی جانچ کی سمت بھٹکانے کی کوشش بھی کر رہی ہے۔ بار بار تفتیشی افسر بدلے جا رہے ہیں۔ جیسے ہی جانچ آگے بڑھتی ہے، حکومت ایس آئی ٹی کے حکام کو تبدیل کر دیتی ہے۔

    یہ بھی پڑھیں  لکھنؤ: جھونپڑیوں میں لگی آگ
    یہ بھی پڑھیں  دلوں میں لگے زنگ کو صاف کرنے کیلئے اللہ کا ذکر ضروری:مولانا حکیم محمد عبداللہ مغیثی

    ایسی صورت میں تحقیقات میں رکاوٹ کا خدشہ ہے۔ دراصل، مدھیہ پردیش میں ہائی پروفائل ہنی ٹریپ معاملے کی جانچ کے لئے پولیس ہیڈ کوارٹر کے ذریعہ خصوصی تفتیشی ٹیم (ایس آئی ٹی) کا قیام کیا گیا ہے جس میں آئی جی ڈی سرینواس ورما چیف تھے۔ اس کے دو دن بعد ہی انہیں ہٹا کر سنجیو شمی کو ایس آئی ٹی چیف بنا دیا گیا۔ انہوں نے بھی تین دن معاملے کی جانچ کی، لیکن اس کے بعد انہیں بھی ہٹا دیا گیا اور ڈی جی راجندر کمار کو ایس آئی ٹی چیف بنا دیا گیا۔ بار بار ایس آئی ٹی چیف تبدیل کرنے سے ہنی ٹریپ معاملے کی رازداری پر سوال کھڑے ہو گئے ہیں۔ اسی کے سبب ہائی کورٹ میں جمعرات کو درخواست دائر کی گئی ہے جس میں ہائی کورٹ کی نگرانی میں سی بی آئی یا کسی مرکزی جانچ ایجنسی سے معاملے کی تحقیقات کرنے کی مانگ کی گئی ہے۔

    یہ بھی پڑھیں  جھار کھنڈ کے نتائج سے بی جے پی کے غرور کا سر نیچا ہوا ہے : مہاوکاس اگھاڑی

    Latest news

    مرکزی وزیر آیوش نے سی سی آر یو ایم کا دورہ کیا اور تحقیقی کاموں کی پذیرائی کی

    نئی دہلی : وزارت آیوش اور وزارت بندرگاہ، جہاز رانی اور آبی راستوں کے کابینی وزیر جناب سروانند سونوال...

    کرناٹک میں سیلاب سے بے گھر ہوئے لوگوں کو بھی جمعیۃعلماء ہند نے فراہم کیا آشیانہ

    ہندوستان میں اسلام حملہ آوروں سے نہیں مسلم تاجروں کے ذریعہ پہنچا ، ملک میں اقتدارکے لئے ہورہی ہے...

    عام آدمی پارٹی کی حکومت بننے کے 24 گھنٹوں میں یوپی کے عوام کو 300 یونٹ بجلی مفت ملے گی: منیش سسودیا

    لکھنؤ / نئی دہلی : عام آدمی پارٹی نے اتر پردیش میں آئندہ اسمبلی انتخابات کے حوالے سے ایک...

    بی جے پی کے دورحکومت میں ملک کی خواتین و بیٹیاں انصاف کے لئے در در بھٹک رہی ہیں

    کانگریس ہیڈ کوارٹر 24 اکبر روڈ پر کانگریس خواتین کے زیر اہتمام منعقدہ یوم خواتین کے موقع پرعمران پرتاپ...

    تبلیغی جماعت کے مرکز ’ نظام الدین‘ کو ہمیشہ کے لئے تو بند نہیں کیا جا سکتا : عدالت

    نئی دہلی : مرکزی حکومت نے دہلی ہائی کورٹ میں کہا ہے کہ گزشتہ سال جو تبلیغی جماعت کے...

    بی جے پی اور یوگی حکومت نہ تو آم کی ہے اور نہ ہی رام کی، انہوں نے رام مندر کے چندے میں بھی...

    ایودھیا/نئی دہلی : عام آدمی پارٹی نے منگل کو پارٹی کے سینئر لیڈر اور دہلی کے نائب وزیر اعلی...

    Must read

    You might also likeRELATED
    Recommended to you