رازداری پالیسی

ہمارے بارے میں

رابطہ

  • قومی نیوز
  • ہوم

    Hindi

    Epaper Urdu

    YouTube

    Facebook

    Twitter

    Mobile App

    اروند کیجریوال نے اپنی رہائش گاہ پر دہلی کے شعرا ء سے کی ملاقات

    نئی دہلی : ہیرے کی قیمت جوہری ہی سمجھے،،یہ کہاوت دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال پر صادق آتی ہے ۔ایک ایسے وقت میں جب مسلمانوں کی طرح اردو زبان بھی فرقہ پرستوں کے نشانہ پر ہے ،کبھی اس کو مسلمانوں کی زبان کہہ سائڈ لائن کرنے کی کوشش کی جاتی ہے تو کبھی غیر ملکی جیسی گالی سے نوازا جاتا ہے !کیجریوال نے مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والی اردو برادری خصوصاً شعرا ء حضرات کو اپنی رہائش گاہ بلا کر ملاقات کی ۔انہوں نے کہا کہ اردو ہماری مشترکہ تہذیب کی علم بردار ہے ،اتحاد ،اتفاق ،اخوت اور قومی یکجہتی اس کی پہچان رہی ہے ۔

    انہوں نے کہا کہ اردو نے ہمیں جہاں گفتگو کا سلیقہ سکھایا ،غمی اور خوشی کے اظہار کے انداز بتلائے وہیں انقلاب زندہ باد جیسا نعرہ بھی دیا ۔انہوں نے کہا کہ ہماری سرکار اردو زبان و ادب کے فروغ کے لئے پابند عہد ہے، اردو اکادمی دہلی کے حوالے سے مشاعرے ،سیمینار ، کتابوں کی اشاعت اور تہذیبی و ثقافتی پروگراموں کے انعقاد کے علاوہ چلائے جارہے بیشتر پروگرام اس کی زندہ مثالیں ہیں ۔انہوں نے کہا کہ آج نفرت کی سیاست کا دور دورہ ہے ،اقتدار کے بھوکے انسانیت مخالف سیاسی ظالموں نے پورے ملک کو ہندو مسلم میں تقسیم کردیا ہے،صحت ،تعلیم ،غریبی ،بھکمری ،بے روزگاری اور بد عنوانی جیسے بنیادی مسائل کہیں روپوش ہوگئے ہیں ۔

    یہ بھی پڑھیں  افغانستان دنیا کا سب سے زیادہ جان لیوا جنگی ملک : یونیسیف

    وزیر اعلی نے کہا آپ دانشوروں کی ذمہ داری ہے کہ نفرت کے خلاف اپنے قلم کا استعمال کریں ۔صحت ،تعلیم ،غریبی ،بھکمری ،بے روزگاری ،بد عنوانی اورغیر برابری جیسے مسائل کو اپنی تحریروں کا حصہ بنائیں تاکہ گاندھی اور آزاد کے خوابوں کا ہندوستان بنایا جا سکے ۔انہوں نے کہا کہ مرکز کی بر سر اقتدار پار ٹی نے پورے ہندوستان کو نفرت کی بھینٹ چڑھا رکھا ہے واحد ریاست دہلی ہے جہاں عام آدمی پارٹی کی ایماندار سیاست نے ان کو اپنے مقصد میں کامیاب نہیںہونے دیا ہے بی جے پی والے یہاں آتے ہیں تو انھیں ہندو مسلم کے بجائے کچی کالونیوں کی بات کر نی پڑتی ہے ۔

    یہ بھی پڑھیں  وزیر اعظم مودی کو ملا ’گلوبل گول کیپر ایوارڈ‘، کہا یہ کروڑوں ہندوستانیوں کا اعزاز

    کیجریوال نے کہا کہ عآپ پارٹی نے یہ ثابت کر کے دکھا یا ہے کہ سرکار ایمانداری سے چلائی جا سکتی ہے ،پیسے سے اقتدار اور اقتدار سے پیسے کی مذموم روایت کو ختم کیا ہے ،عوام کو وہ بنیادی سہولیات فراہم کی ہیں جو خواب سمجھی جاتی تھیں ،پورے پانچ سال میں بجلی کے دام بڑھنے نہ دیکر بد عنوانوں کو بتایا ہے کہ ہم بجلی کمپنیوںکی رشوت سے نہیں عوام کے پیسہ سے الیکشن لڑتے ہیں ۔انہوں نے الزام لگایا کہ ملک کی ستہ دھاری سیاسی جماعتوں نے جان بوجھ کر لوگوں کو تعلیم سے دور رکھا ہے ہمارا سنکلپ ہے کہ ملک کو اس طرح کی مجرمانہ سیاست سے پاک کرتے ہوئے عوام کے مفادات کے لئے کام کرینگے ۔

    یہ بھی پڑھیں  پچھلے سال دہلی کے دو کروڑ عوام نے ڈینگو کو شکست دیتے ہوئے دکھایا تھا ، اس بار بھی ہمیں ڈینگو کو شکست دینا ہے: اروند کیجریوال

    ریاست بھر سے اردو شاعروں کو لانے کی ذمہ داری سابق کونسلر جنتا کالونی حالیہ صدر ضلع چاندنی چوک ذاکر خان کو دی گئی تھی جنہوں نے معروف شاعر و صحافی امیر امروہوی کی مدد سے اس کو انجام دیا ۔ وزیر اعلی کو مخاطب کرتے ہوئے ذاکر خان نے کہا کہ اردو شعرا ء پر مشتمل یہ جماعت سماج کی آئنہ دار ہے ،سچائی اور صاف گوئی ان کا مسلک ہے ،ماضی کی تاریخ گواہ ہے کہ انہوں نے اپنے پر اثر کلام کے ذریعہ ہواؤں کے رخ تبدیل کئے ہیں اور آج بھی ان کا قلم اتنی طاقت رکھتا ہے کہ یہ مخالف ہواؤں کا منھ موڑ سکتے ہیں اس وقت ان کا یہاں ہونا اس بات کی دلیل ہے کہ یہ اروند کیجریوال اور عام آدمی پارٹی کی عوام دوست انقلابی سیاست کے حامی ہیں اور مستقبل میں اس سوچ کی جڑوں کو مضبوطی فراہم کرنے کا کام کرینگے ۔

    یہ بھی پڑھیں  ادھو ٹھاکرے نے کہا مہاراشٹر میں این آر سی نافذ نہیں ہوگی

    اس ادبی قافلہ کے قائد امیر امروہوی نے وزیر اعلی اروند کیجریوال کے سامنے تمام شعرا ء کا تعارف کراتے ہوئے کہا کہ یہ وہ لوگ ہیں جو حالات و اقعات کو اپنے خوبصورت اشعار میں ڈھالنے کا ہنر جانتے ہیں اور اپنی با ت بہ آسانی لوگوں کے ذہنوں پر نقش کردیتے ہیں ،یہ دہلی کے مختلف علاقوں میںضرور رہائش پزیر ہیں مگر ان کی جڑین ہندوستان بھر میں پھیلی ہوئی ہے ۔اس موقع پر بزرگ استاذ شاعر اسلم دہلوی نے تمام شعراء کرام کی جانب سے وزیر اعلی کی خدمت میں گلدستہ پیش کیا جبکہ شاعرات کی نمائندگی سینئر شاعرہ راشدہ باقی حیا نے کی ۔

    یہ بھی پڑھیں  افغانستان دنیا کا سب سے زیادہ جان لیوا جنگی ملک : یونیسیف

    معروف شاعر متین امروہوی نے وزیر اعلی کی خدمت میںسپاس نامہ و منظوم نذرانہ پیش کیا ۔شاہد انجم ،آصف نظر ،عرفان اعظمی ،دانش ایوبی ،راشدہ باقی حیا اور وسیم راشد نے وزیر اعلی کو خراج تحسین پیش کیا نیز اردو سے متعلق اہم مسائل بھی ان کے گوش گزار کئے ۔وفدمیں سیف سحری ،جاوید قمر ،نشتر امروہوی ،عادل رشید ،مبارک قاسمی ،شاہد انور،فرید احمد فرید،احمد علوی،شرف نانپاروی ،سلیم کاشف ،فرحت اللہ خا فرحت ،صبا عزیز ،پونم ماٹیا اور کرشنا شرما دامنی کے علاوہ کثیر تعدادمیں شعرا ء و شاعرات شامل رہے ۔

    LEAVE A REPLY

    Please enter your comment!
    Please enter your name here

    Latest news

    مرکزی وزیر آیوش نے سی سی آر یو ایم کا دورہ کیا اور تحقیقی کاموں کی پذیرائی کی

    نئی دہلی : وزارت آیوش اور وزارت بندرگاہ، جہاز رانی اور آبی راستوں کے کابینی وزیر جناب سروانند سونوال...

    کرناٹک میں سیلاب سے بے گھر ہوئے لوگوں کو بھی جمعیۃعلماء ہند نے فراہم کیا آشیانہ

    ہندوستان میں اسلام حملہ آوروں سے نہیں مسلم تاجروں کے ذریعہ پہنچا ، ملک میں اقتدارکے لئے ہورہی ہے...

    عام آدمی پارٹی کی حکومت بننے کے 24 گھنٹوں میں یوپی کے عوام کو 300 یونٹ بجلی مفت ملے گی: منیش سسودیا

    لکھنؤ / نئی دہلی : عام آدمی پارٹی نے اتر پردیش میں آئندہ اسمبلی انتخابات کے حوالے سے ایک...

    بی جے پی کے دورحکومت میں ملک کی خواتین و بیٹیاں انصاف کے لئے در در بھٹک رہی ہیں

    کانگریس ہیڈ کوارٹر 24 اکبر روڈ پر کانگریس خواتین کے زیر اہتمام منعقدہ یوم خواتین کے موقع پرعمران پرتاپ...

    تبلیغی جماعت کے مرکز ’ نظام الدین‘ کو ہمیشہ کے لئے تو بند نہیں کیا جا سکتا : عدالت

    نئی دہلی : مرکزی حکومت نے دہلی ہائی کورٹ میں کہا ہے کہ گزشتہ سال جو تبلیغی جماعت کے...

    بی جے پی اور یوگی حکومت نہ تو آم کی ہے اور نہ ہی رام کی، انہوں نے رام مندر کے چندے میں بھی...

    ایودھیا/نئی دہلی : عام آدمی پارٹی نے منگل کو پارٹی کے سینئر لیڈر اور دہلی کے نائب وزیر اعلی...

    Must read

    You might also likeRELATED
    Recommended to you