رازداری پالیسی

ہمارے بارے میں

رابطہ

  • قومی نیوز
  • ہوم

    Hindi

    Epaper Urdu

    YouTube

    Facebook

    Twitter

    Mobile App

    این پی آر پرانے طریقے سے ہی ہوگا ، این آر سی غیر ضروری : نتیش

    پٹنہ: بہار کے وزیراعلیٰ نتیش کمار نے آج اسمبلی میں قومی شہری رجسٹر ( این آر سی ) کو غیر ضروری بتایا اور کہاکہ قومی مردم شماری رجسٹر ( این پی آر ) کے حالیہ خاکہ سے مستقبل میں این آر سی کے نفاذ پر کچھ لوگوں کوخطرات لاحق ہوں گے اسی کو دیکھتے ہوئے ان کی حکومت نے این پی آر 2010 کے پرانے خاکہ کی بنیاد پر ہی کرانے کیلئے مرکزی حکومت کو خط لکھا ہے ۔مسٹر کمار نے اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر تیجسو ی پرساد یادو کے شہریت ترمیمی قانون ( سی اے اے ) ، این آر سی اور این پی پر ایوان میں خصوصی بحث کیلئے دی گئی تحریک التوائتجویز کی منظوری کے بعد قریب ایک گھنٹے کی ہوئی بحث کا جواب دیتے ہوئے کہاکہ سات اکتوبر 2019 کو حکومت ہند کے رجسٹرار اور مردم شماری کمشنر کی جانب سے بہارحکومت کو این پی آر سے متعلق ایک خط بھیجا گیا تھا اس سے قبل 15 مئی 2010 سے 15 جون 2010 کے مابین این پی آر کرایا گیا تھا اور اس کے بعد سال 2015 میںبھی اس پر کچھ کام ہوا تھا۔وزیراعلیٰ نے کہاکہ اس بار 2020 میں جو این پی آر کرانے کیلئے خط بھیجا گیا ہے اس کے خاکہ میں کچھ دیگر اطلاعات کو جمع کرنے کی بات ہے ۔

    یہ بھی پڑھیں  جمعیۃعلماء ہند کے ریویوپٹیشن کا مسودہ تیار

    سال 2010 میں این پی آر میں تھر ڈ جینڈر کو شامل نہیںکیا گیاتھا لیکن اس بار اس میں تھرڈ جینڈر کو جوڑا گیا ہے ۔ اس کے علاوہ والدین کا نام ، ان کی تاریخ پیدائش ، ان کی جائے پیدائش اور جائے وفات کی بھی جانکاری طلب کی گئی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ اس طرح کی معلومات ہر کسی کو نہیںہے ۔ وہ بھی اپنے ماں ۔ باپ کے متعلق میں ایسی معلومات سے لا علم ہیں۔مسٹر کمار نے کہاکہ این پی آر 2020 میں ماں ۔ باپ سے متعلق پوچھی گئی جانکاری دستیاب نہیںہونے پر اس کے آگے انورٹیڈ کوما کے اندر چھوٹی لکیر کھینچ کر چھوڑ دینی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ اس سے مستقبل میں این آر سی کے نفاذ سے متعلق خطرات لاحق ہوںگے اس لئے ان کی حکومت نے حکومت ہند کے رجسٹرار اور مردم شماری کمشنر کو 15 فروری کو خط لکھ درخواست کی ہے کہ این پی آر میں تھرڈ جینڈر کو جوڑنے کے علاوہ دیگر سوالات کو شامل نہیں کیاجائے ۔وزیراعلیٰ نے کہاکہ نئے خاکہ والے این پی آر 2020 کے متعلق میں ابھی تک مرکزی کی جانب سے رسمی نوٹیفکیشن بھی جاری نہیں ہوا ہے ۔

    یہ بھی پڑھیں  کشمیر میں مارے گئے مزدوروں کے اہل خانہ کے 5-5 لاکھ کامعاوضہ دے گی ممتا حکومت
    یہ بھی پڑھیں  نئے سال میں بھاری پڑے گی گیس سلینڈر کی قیمت

    انہوں نے واضح کیا کہ 07 اکتوبر 2019 کو مرکزی حکومت کے رجسٹرار اور مردم شماری کمشنر کی جانب سے حکومت بہار کو این پی آر سے متعلق جو خط بھیجا گیا تھا اس کے ضمن میں ریاست میں 15 مئی سے 15 جون تک این پی آر کے کام کیلئے نوٹیفکیشن ان کی حکومت کی جانب سے جاری کیا گیا ہے لیکن اس میں کہیں یہ نہیں ہے کہ اسے نئے خاکہ کی بنیاد پر کرایا جائے گا۔مسٹر کمار نے کہاکہ ان کی حکومت نے مرکز کو خط لکھ کر 2010 کے پرانے خاکے کی بنیاد پر ہی این پی آر کرانے کی درخواست کی ہے ۔ وہ چاہتے ہیں کہ ایوان سے اس سے متعلق میں اتفاق رائے سے تجویز پاس کر کے مرکز کو بھیجی جائے ۔ انہوں نے کہاکہ دونوں ایوانوں سے 18 فروری 2019 کو 2021 میں ذات پر مبنی مردم شماری کرانے کی اتفاق رائے سے تجویز پاس کرائی گئی تھی ۔ وہ چاہتے ہیں کہ اس سے متعلق میںبھی ایک بار پھر سے تجویز پاس کراکر مرکزی حکومت کو بھیجی جائے ۔وزیراعلیٰ نے این آر سی کا تذکر ہ کرتے ہوئے کہاکہ اس کی کوئی ضرورت نہیں ہے ۔

    یہ بھی پڑھیں  سیاہ قوانین کے خلاف تلنگانہ کے وزیراعلی اپنے موقف کا اعلان کریں
    یہ بھی پڑھیں  جمعیۃعلماء ہند کے ریویوپٹیشن کا مسودہ تیار

    وزیراعظم نریندر مودی نے 22 دسمبر 2019 کو واضح کرتے ہوئے کہا تھا کہ  ان کی حکومت بننے کے بعد سے آج تک این آر سی پر کبھی کوئی بحث نہیں ہوئی ہے ۔ اسے صرف سپریم کورٹ کے کہنے پر آسام کے لئے کرناپڑا۔ این آر سی جو ابھی کہیں ہے ہی نہیں ، کوئی مسودہ نہیں بنا ، کابینہ میں آیا نہیں ، جس کے لئے ابھی تک شرائط و ضوابط بھی نہیں بنے اسے لیکر ہوا کھڑا کیاجارہا ہے ۔ یہ صرف آسام کے لئے ہے اور اس کو لیکر بے وجہ ہوا کھڑا کیاجارہاہے ۔ انہوں نے کہاکہ شہریت ترمیمی قانون 2003 میں ہی این آر سی کی بات تھی ۔

    LEAVE A REPLY

    Please enter your comment!
    Please enter your name here

    Latest news

    دہلی میں 5-ٹی پلان کو عمل میں لاکر جیتیں گے کورونا سے جنگ : اروند کیجریوال

    نئی دہلی : دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے کہا کہ ہمیں ہمیشہ سے کورونا کو شکست دینے...

    میڈیا کی متعصبانہ رپورٹنگ کے خلاف جمعیة علماء ہند سپریم کورٹ میں

    نئی دہلی:ملک کے بے لگام ٹی وی چینلوں پر قانونی لگام لگانے کی پہل جمعیةعلماءہند نے کردی گزشتہ روز...

    مرکزی حکومت نے 27 ہزار پی پی ای کٹس مختص کیں: اروند کیجریوال

    نئی دہلی: دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے کہا کہ ہم دہلی میں کسی کو بھوکا سونے نہیں...

    کورونا وائرس پوری دنیا میں قہر بن کر ٹوٹ رہاہے : مولانا ارشد مدنی

    دیوبند: جمعیۃ علماء ہند کے قومی صدر مولانا سید ارشد مدنی نے کہاکہ کورونا وائرس پوری دنیا میں قہر...

    سات نئے کورونا کے مثبت معاملے ملنے سے مچا ہڑکمپ

    لکھنؤ:راجدھانی میں کورونا مثبت پائے گئے مریضوں کی تعداد میں کوئی بھی کمی نہیں آرہی ہے۔سات نئے معاملے سامنے...

    معـــاشرتی ، مــذہبی اور عــــلاقائی اختــلاف سے بالاتر ہوکر ہی کـــوویڈ 19 سےجیتی جاسکتی ہے جنـــــــگ : پروفیســــر احــــرار حســـــین

    نئی دہلی : سنٹر فار ڈسٹنس اینڈ اوپن لرننگ، جامعہ ملیہ اسلامیہ کے ڈائریکٹر (اکیڈمک) پروفیسر احرار حسین نےکہاکہ...

    Must read

    You might also likeRELATED
    Recommended to you