رازداری پالیسی

ہمارے بارے میں

رابطہ

  • قومی نیوز
  • ہوم

    Hindi

    Epaper Urdu

    YouTube

    Facebook

    Twitter

    Mobile App

    جمہوریت میں اپوزیشن کا احترام کیا جانا چاہئے : اسدالدین اویسی

    نئی دہلی:آل انڈیا مجلس اتحادالمسلمین (اے آئی ایم آئی ایم) کے صدر اور حیدرآباد سے لوک سبھا ممبر پارلیمنٹ اسد الدین اویسی نے ایک مضمون کو شیئر کرتے ہوئے ٹوئٹر پر لکھا ہے کہ جمہوریت میں اپوزیشن کا احترام کیا جانا چاہئے نہ کہ اسے نظرانداز کیا جانا چاہئے۔ تاہم کچھ لوگوں کو ایسا کرنا نہیں آتا پر زیادہ تر لوگوں کی بھلائی کے لئے یہی واحد راستہ ہے ۔آبزرور ریسرچ فاؤنڈیشن کے اس مضمون میں 2020 کے لئے ایک سوال ہے کہ کیا بھارت واپسی کر پائے گا؟ مضمون میں کہا گیا ہے کہ وزیر اعظم کی 2019 کی انتخابی جیت کو ان کی طرف سے لئے گئے فیصلوں نے کمزور کر دیا۔ اس مضمون میں مودی حکومت کی طرف سے 2019 میں لئے گئے فیصلوں پر تبصرہ کیا گیا ہے۔

    یہ بھی پڑھیں  اروند کیجریوال نے دکھائی 100 نئی بسوں کو ہری جھنڈی

    مضمون میں کشمیر سے 370 ہٹائے جانے، بدحال معیشت کا حوالہ دیتے ہوئے لکھا گیا ہے کہ اگر مودی حکومت اس طرح کے فیصلے لیتی رہی تو وہ دنیا کے آگے اپنا مقام گنوا دے گی۔ مضمون میں کہا گیا ہے کہ ہندوستان کے دوست قوم بھی اس بات سے فکر مند ہیں کہ بھارت ایک سیکولر اور تکثیریت ملک سے کس سمت میں آگے بڑھ رہا ہے۔ ملک بھر میں شہریت قانون اوراین آرسی کو لے کر ہو رہے طلباء تحریکوں کی جانب دنیا کی نگاہیں لگی ہوئی ہیں۔ مضمون کے سب سے آخر میں وہ لکیریں لکھی ہیں جنہیں ممبرپارلیمنٹ اسدالدین اویسی نے شیئرکیا ہے۔

    اس سے قبل اسد الدین اویسی نے شہریت ترمیمی قانون (سی اے اے) اور قومی شہری رجسٹر (این آرسی) کو لے کر بہار کے کشن گنج میں ایک ریلی سے خطاب کیاتھا۔ اس ریلی میں اویسی نے وزیر اعظم نریندر مودی پر سی اے اے،،این آرسی اوراین پی آر کو لے کر عوام کو گمراہ کرنے کا الزام لگایا۔ اویسی نے یہ الزام بھی لگایا کہ وزیر اعظم ان اقدامات سے ملک کو بانٹنا چاہتے ہیں اور آئین کو تباہ کر رہے ہیں۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے میرٹھ کے ایس پی کے بیان پر بھی حملہ بولا۔ میرٹھ ایس پی کے بیان پر اویسی نے کہا،ایس پی صاحب، ہندو مسلمانوں نے آزادی کی لڑائی لڑی تھی۔ آپ کو ہماری قربانی یاد نہیں آئی؟ کتنے بھی ظلمہم پر اور مسلمانوں پر ہو، لیکن ہم یا ملک کا کوئی مسلمان بھارت چھوڑ کر نہیں جائیں گے۔ یہ ملک ہمارا ہے۔

    یہ بھی پڑھیں  مسلسل تیسرے دن سستا ہوا پٹرول، ڈیزل کی قیمتیں مستحکم
    یہ بھی پڑھیں  مسلسل تیسرے دن سستا ہوا پٹرول، ڈیزل کی قیمتیں مستحکم

    وہیں اویسی نے روئی دھاسا میدان میں ’آئین بچاؤ‘ تحریک کو خطاب کرتے ہوئے کہا،کہ وزیر اعظم نریندر مودی سی اے اے،این پی آر اور این آرسی کو لے کر عوام کو گمراہ کر رہے ہیں۔ مودی ایک بار پھرسی اے اے،این آرسی اور این پی آر جیسے اقدامات کے ذریعے ملک کو تقسیم کرنا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ این پی آر اور این آرسی میں کوئی فرق نہیں ہے، اگر ہم آج خاموش رہے تو آنے والی نسلوں کو جواب دے گا۔ اے آئی ایم آئی ایم صدر نے کہا کہ مسلمانوں نے ہندوستان میں رہنے کا راستہ اپنانے کی طرف سے محب وطن ہونے کا ثبوت دیا تھا، لیکن وزیر اعظم اسی برادری سے شہریت ثابت کرنے کے لیے کہہ رہے ہیں۔

    LEAVE A REPLY

    Please enter your comment!
    Please enter your name here
    یہ بھی پڑھیں  اروند کیجریوال نے دکھائی 100 نئی بسوں کو ہری جھنڈی

    Latest news

    دس مہینے بعد تعلیمی سرگرمی شروع ہونے سے بچوں کے چہروں پر لوٹی مسکراہٹ

    نئی دہلی: دس مہینے بعد دہلی کے اسکولوں میں محدود ہی سہی لیکن رونقیں واپس لوٹ آئی ہیں۔ کل...

    دہلی فسادات معاملہ،متاثرین کی باز آبادکاری میں مصروف اقلیتی فلاحی کمیٹی

    میٹنگ میں جلد سے جلد زیر التوامعاملات کے نپٹارہ کی افسران کو ہدایت،کچھ معاملات میں دوبارہ سروے کرنے کی...

    بی جے پی کے زیر اقتدار ایم سی ڈی سے نہ صرف دہلی کے لوگ متاثر ہیں، بلکہ ملازمین بھی نالاں ہیں : سوربھ...

    نئی دہلی : عام آدمی پارٹی کے چیف ترجمان سوربھ بھاردواج نے کہا کہ بی جے پی کے زیر...

    راجیندر نگر کے ایم ایل اے راگھو چڈھا نے سوامی دیانند سروودیا کنیا اسکول کا دورہ کیا

    لاک ڈاؤن کے بعد اسکول کھلنے کے بعد سکیورٹی کے تمام انتظامات کردیئے گئے ہیں، طلباء اساتذہ کو N95...

    Must read

    You might also likeRELATED
    Recommended to you