رازداری پالیسی

ہمارے بارے میں

رابطہ

  • قومی نیوز
  • ہوم

    Hindi

    Epaper Urdu

    YouTube

    Facebook

    Twitter

    Mobile App

    شری رام جنم بھومی ٹرسٹ : 6 دسمبر سے منسلک کسی نام کی عدم شمولیت دور اندیشی کا مظہر : چمپت رائے

    نئی دہلی: ایودھیا تحریک میں اہم کردار ادا کرنے والے وشو ہندو پریشد (وی ایچ پی) کے بین الاقوامی نائب صدر چمپت رائے نے کہا ہے کہ رام جنم بھومی تیرتھ چھیتر ٹرسٹ میں بابری مسجد انہدام سے جڑے کسی ملزم کا نام شامل نہیں کیا جانا مرکزی حکومت کی دور اندیشی کا مظہر ہے۔

    وی ایچ پی نائب صدر چمپت رائے نے جمعہ کو جاری ایک عوامی خط میں کہا کہ اگر ٹرسٹ میں 06 دسمبر، 1992 کے واقعہ کے کسی ملزم کا نام شامل کر لیا جاتا تو رام مندر کی تعمیر کی مخالف طاقتیں فوری فعال ہو جاتیں اور عدالت کا دروازہ کھٹکھٹاتیں۔ وہ حالات زیادہ سنگین ہوتے۔ اس سے بچایا گیا ہے۔ اسے دور اندیشانہ قدم کہنا چاہیئے۔

    چمپت رائے نے اپنے خط میں لکھا، “92 سال سے بھی زیادہ عمر کے ایڈووکیٹ کے. پاراشرن جی کو ٹرسٹ کا پہلا ٹرسٹیز بنایا گیا ہے۔ انہی کی موجودگی میں مرکز ی حکومت کے انڈر سکریٹری نے ٹرسٹ کا رجسٹریشن کرایا ہے۔ ٹرسٹ میں واضح ذکر ہے کہ رجسٹریشن کے بعد ٹرسٹ کے قائم کرنے والوں کا کوئی کنٹرول ٹرسٹ کی سرگرمیوں پر نہیں رہے گا۔ صرف ٹرسٹ کے ارکان ہی ٹرسٹ کی ملکیت کا استعمال ٹرسٹ کے مقاصد کے مطابق کریں گے۔ اس طرح کی تشکیل کے بعد ٹرسٹ خود مختار ہے۔ ٹرسٹ میں دو مقام اب خالی رکھے گئے ہیں اور ان دونوں مقامات پر افراد کے انتخاب کا حق ٹرسٹ کے ابھی تک نامزد آٹھ اراکین کو دیا گیا ہے۔ ٹرسٹ کی پہلی میٹنگ ہوگی، ضروری قانونی عمل کارروائی پوری کی جائے گی اور سماج کی خواہشات کے مطابق دو افراد کو ٹرسٹ کے ساتھ منسلک کر سکے گا۔ اس طرح کل 10 ٹرسٹیز ہو جائیں گے۔ یہ سب بہت گہرائی تک سوچنے کے بعد فیصلہ کیا گیا ہے۔
    خط میں لکھا گیا ہے کہ “نرموہی اکھاڑا کی ایودھیا کا ایک نمائندہ ٹرسٹیز رکھا گیا ہے۔

    یہ بھی پڑھیں  دہلی کیلئے تمام راستے بند،کسانوں نے منگل کو ملک گیر بند کرنے کی اپیل
    یہ بھی پڑھیں  دہلی اسمبلی سے این پی آر کے خلاف قرار داد منظور

    اسے ملا کر کل 11 ٹرسٹیز ہیں۔ تمام 11 ٹرسٹی کو ووٹ کا حق دیا گیا ہے۔ اگرنرتیہ گوپا داس جی مہاراج یا چمپت رائے کو پہلے دن سے ہی ٹرسٹ میں شامل کر لیا جاتا ہے تو مندر کی تعمیر کی مخالف طاقتیں فوری عدالت کو درخواست کرتیں کہ یہ دونوں شخص 06 دسمبر، 1992 کے سانحے کے ملزم شامل کئے گئے ہیں۔ان کے خلاف لکھنؤ کی خصوصی سی بی آئی عدالت میں مقدمہ چل رہا ہے۔ لہذا دونوں نام ہٹائے جائیں، تو تنازعہ ختم کرنے کے لئے عدالت دونوں نام ہٹانے کا حکم دے سکتی تھی۔ وہ حالات زیادہ سنگین اور ذلت آمیز ہوتے، اس سے بچا گیا ہے۔ اسے دور اندیشی ہی کہا جانا چاہئے۔ گزشتہ 490 سالوں کے بعد مندر کی تعمیر کے لئے موقع ہے، دیگر کسی کام کے لئے نہیں۔ لہذا ہم سب کا کام ہونا چاہئے کہ مندر کی تعمیر کا عمل جلد شروع ہو۔ اس کے لئے ہم سب معاون بنیں۔

    یہ بھی پڑھیں  جان ابراہم نے کہا،کیرالہ میں مودی نہیں اسی لئے تمام مذاہب کے لوگوں میں امن قائم

    وی ایچ پی نائب صدر رائے نے لکھا ہے، “اہم بات یہ ہے کہ حکومت ہند کی طرف سے سال 1993 میں رام جنم بھومی اور اس کے ارد گرد کی تحویل کی گئی 67.3 ایکڑ زمین کل (چھ فروری) شام تک نو تشکیل شدہ ٹرسٹ کو منتقل کئے جانے کا آرڈر خط، نو تشکیل شدہ ٹرسٹ کے (ایودھیا رہائشی) رکن وملیندر موہن پرتاپ مشرکے حوالے کر دیا گیا ہے۔ یہ منصوبہ سازوں کابہترین نمونہ ہے۔ دوسرے معاملے میں زمین کا حق حاصل کرنے میں طویل جدو جہد کرنا پڑتی ۔

    یہ بھی پڑھیں  جان ابراہم نے کہا،کیرالہ میں مودی نہیں اسی لئے تمام مذاہب کے لوگوں میں امن قائم

    LEAVE A REPLY

    Please enter your comment!
    Please enter your name here

    Latest news

    اردو اکادمی دہلی ، دہلی ای۔ لرننگ کورس جلد شروع کرے: منیش سسودیا

    اردو اکادمی، دہلی کی دہلی سیکریٹریٹ میں منعقدگورننگ کونسل کی میٹنگ میں کئی اہم تجاویز پیش نئی دہلی : اردو...

    عام آدمی پارٹی کے روہتاش نگر ودھان سبھا میں منعقدہ مظاہرے میں مقامی لوگوں کی ایک بڑی تعداد نے حصہ لیا

    نئی دہلی : بی جے پی کی زیر اقتدار ایم سی ڈی میں بدعنوانی اور مودی حکومت کی ناکام...

    ہر فرد میں ایک دلی جذبہ ہے ،یہاں لوگ ادب سے محبت کرتے ہیں : عامر اصغر قریشی

    شہر ناندورا میں سہ ماہی تکمیل کے مدیر عامر اصغر قریشی کے اعزاز میں ادبی نشست ناندورا : بتاریخ 23...

    ایم سی ڈی بلڈر مافیا کے تعاون سے لیز پر دی گئی دکانوں کا سروے کررہی ہے اور عمارت کو خطرناک دکھا کر خالی...

    نئی دہلی : عام آدمی پارٹی نے بی جے پی کے زیر اقتدار نارتھ ایم سی ڈی کی طرف...

    اگلے تین دن تک مسلسل بارش کے امکانات ، تمام افسران دن میں 24 گھنٹے دستیاب رہیں گے ، کسی بھی وقت ضرورت ہوسکتی...

    نئی دہلی : لیفٹیننٹ گورنر اور وزیر اعلی اروند کیجریوال نے آج ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے دہلی کے نکاسی...

    Must read

    You might also likeRELATED
    Recommended to you