رازداری پالیسی

ہمارے بارے میں

رابطہ

  • قومی نیوز
  • ہوم

    Hindi

    Epaper Urdu

    YouTube

    Facebook

    Twitter

    Mobile App

    جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ میں تصادم، دو جنگجو ہلاک

    سری نگر : جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ کے واگہامہ بجبہاڑہ میں منگل کی علی الصبح ہونے والے ایک مسلح تصادم میں دو جنگجو مارے گئے ہیں۔ قبل ازیں اتوار اور پیر کی درمیانی شب کو اسی ضلع کے ژوہرو رانی پورہ میں سیکورٹی فورسز نے حزب المجاہدین کے ایک اعلیٰ کمانڈر مسعود احمد بٹ سمیت تین جنگجو کو ہلاک کیا تھا۔

    جموں وکشمیر پولیس کے ایک ترجمان نے بتایا کہ واگہامہ بجبہاڑہ میں منگل کی علی الصبح چھڑنے والے ایک تصادم میں دو عدم شناخت جنگجو مارے گئے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ علاقہ میں آپریشن جاری ہے ۔ ایک رپورٹ میں مہلوک جنگجوﺅں کی شناخت زاہد داس اور جبار ساکنان بجبہاڑہ کے طور پر کی گئی ہے ۔ پولیس کے مطابق اسلامک سٹیٹ جموں و کشمیر سے وابستہ زاہد داس بجبہاڑہ کے حالیہ حملے ، جس میں ایک سی آر پی ایف ہیڈ کانسٹیبل اور ایک چھ سالہ لڑکا جاں بحق ہوئے تھے ، میں ملوث تھا۔

    یہ بھی پڑھیں  معـــاشرتی ، مــذہبی اور عــــلاقائی اختــلاف سے بالاتر ہوکر ہی کـــوویڈ 19 سےجیتی جاسکتی ہے جنـــــــگ : پروفیســــر احــــرار حســـــین

    سرکاری ذرائع نے بتایا کہ ضلع اننت ناگ کے واگہامہ میں جنگجوﺅں کی موجودگی سے متعلق خفیہ اطلاع ملنے پر پولیس، فوج کی 3 آر آر اور سی آر پی ایف نے منگل کی علی الصبح کارڈن اینڈ سرچ آپریشن شروع کیا۔انہوں نے کہا کہ مشتبہ جگہ کو محاصرے میں لینے کے بعد طرفین کے درمیان تصادم چھڑ گیا جس میں دو جنگجو مارے گئے ۔

    یہ بھی پڑھیں  معـــاشرتی ، مــذہبی اور عــــلاقائی اختــلاف سے بالاتر ہوکر ہی کـــوویڈ 19 سےجیتی جاسکتی ہے جنـــــــگ : پروفیســــر احــــرار حســـــین

    انہوں نے مزید کہا کہ تصادم کے دوران سیکورٹی فورسز اور عام شہریوں کا کوئی جانی نقصان نہیں ہوا ہے ۔ سرکاری اعداد و شمار کے مطابق مزید دو جنگجوﺅں کی ہلاکت کے ساتھ وادی میں رواں برس اب تک مارے جانے والے جنگجوﺅں کی تعداد بڑھ کر 118 ہوگئی ہے ۔ ان میں مختلف جنگجو تنظیموں کے چھ آپریشنل کمانڈرس بھی شامل ہیں۔

    بتادیں کہ وادی کشمیر میں سیکورٹی اداروں نے رواں برس مارچ میں کورونا وائرس لاک ڈاﺅن شروع ہونے کے ساتھ ہی جنگجو مخالف آپریشنز میں تیزی لائی۔ سکیورٹی اداروں نے مارے جانے والے جنگجوﺅں کی شناخت ظاہر کرنا بھی بند کردیا ہے اور انہیں اب اپنے آبائی علاقوں سے دور نامعلوم اور غیر ملکی جنگجوﺅں کے لئے مخصوص قبرستانوں میں دفنانا جارہا ہے ۔

    یہ بھی پڑھیں  چدمبرم کی جانچ ایمس کا میڈیکل بورڈ کرے گا

    کشمیر کے حالات پر گہری نظر رکھنے والے تجزیہ کاروں کے مطابق 1990 کی دہائی میں شروع ہوئی مسلح شورش میں پہلی بار ایسا ہوا ہے جب مقامی جنگجوﺅں کی لاشیں ان کے لواحقین کو سونپنے کی بجائے دوسرے اضلاع میں واقع مخصوص قبرستانوں میں دفنائی جارہی ہیں۔

    LEAVE A REPLY

    Please enter your comment!
    Please enter your name here
    یہ بھی پڑھیں  شہری ترمیمی بل کے خلاف جمعیۃ علماء ہند مظفرنگر کا ملک گیر احتجاج

    Latest news

    دہلی حکومت کے کوویڈ اسپتالوں میں آئی سی یو بیڈوں کی مسلسل بڑھ رہی ہے تعداد

    نئی دہلی : کوویڈ -19 کے خلاف دہلی کی لڑائی میں طبی بنیادی ڈھانچے کو مستحکم کرنے کے لئے...

    اردو یونیورسٹی کے ریگولر کورسس میں آن لائن داخلے جاری

    حیدرآباد : مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی نے تعلیمی سال 2020-21 کے لیے مرکزی کیمپس حیدرآباد اور دیگر سٹیلائٹ...

    ’جیو میٹ ‘زوم کے مقابلے آسان:امیتابھ کانت

    جیو میٹ کے سافٹ لانچ اور اس کے استعمال سے ہر کسی کو مفت ویڈیو کانفرنسنگ سہولت کے بعد...

    جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ میں تصادم، دو جنگجو ہلاک

    سری نگر : جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ کے واگہامہ بجبہاڑہ میں منگل کی علی الصبح ہونے والے...

    چینی ایپ پر پابندی لگانے پر ملک نے تعریف کی : جاوڈیکر

    نئی دہلی : اطلاعات و نشریات کے وزیر پرکاش جاوڈیکر نے آج کہا کہ 59موبائل ایپ پر پابندی لگانے...

    بی جے پی کے خلاف کانگریس کارکنان اترے سڑکوں پر

    لکھنؤ : اترپردیش میں تین دہائیوں سے زیادہ وقت سے اقتدار سے باہرکانگریس اس وقت جس طرح سے ریاستی...

    Must read

    You might also likeRELATED
    Recommended to you